القرآن الكريم مع الترجمة

    الفهرس    
26. سورة الشُّعَرَآء
طسم(1)
طا، سین، میم (حقیقی معنی اﷲ اور رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم ہی بہتر جانتے ہیں)
Ta, Sin, Mim. (Only Allah and the Messenger [blessings and peace be upon him] know the real meaning.)
تِلْكَ آيَاتُ الْكِتَابِ الْمُبِينِ(2)
یہ (حق کو) واضح کرنے والی کتاب کی آیتیں ہیں
These are the Verses of the Book that makes clear (the Truth).
لَعَلَّكَ بَاخِعٌ نَّفْسَكَ أَلَّا يَكُونُوا مُؤْمِنِينَ(3)
(اے حبیبِ مکرّم!) شاید آپ (اس غم میں) اپنی جانِ (عزیز) ہی دے بیٹھیں گے کہ وہ ایمان نہیں لاتے
(O Esteemed Beloved!) You will perhaps risk your (dearest) life (grieving) that they do not accept faith.
إِن نَّشَأْ نُنَزِّلْ عَلَيْهِم مِّن السَّمَاءِ آيَةً فَظَلَّتْ أَعْنَاقُهُمْ لَهَا خَاضِعِينَ(4)
اگر ہم چاہیں تو ان پر آسمان سے (ایسی) نشانی اتار دیں کہ ان کی گردنیں اس کے آگے جھکی رہ جائیں
If We intend, We should send down upon them (such) a Sign from heaven as their necks would not but bow down before it.
وَمَا يَأْتِيهِم مِّن ذِكْرٍ مِّنَ الرَّحْمَنِ مُحْدَثٍ إِلَّا كَانُوا عَنْهُ مُعْرِضِينَ(5)
اور ان کے پاس (خدائے) رحمان کی جانب سے کوئی نئی نصیحت نہیں آتی مگر وہ اس سے رُوگرداں ہو جاتے ہیں
And there does not come to them any fresh direction and guidance from the Most Kind (Lord) but they turn away from it.
فَقَدْ كَذَّبُوا فَسَيَأْتِيهِمْ أَنبَاءُ مَا كَانُوا بِهِ يَسْتَهْزِئُون(6)
سو بیشک وہ (حق کو) جھٹلا چکے پس عنقریب انہیں اس امر کی خبریں پہنچ جائیں گی جس کا وہ مذاق اڑایا کرتے تھے
Thus they have indeed denied (the Truth), so the news of what they used to make fun of will reach them soon.
أَوَلَمْ يَرَوْا إِلَى الْأَرْضِ كَمْ أَنبَتْنَا فِيهَا مِن كُلِّ زَوْجٍ كَرِيمٍ(7)
اور کیا انہوں نے زمین کی طرف نگاہ نہیں کی کہ ہم نے اس میں کتنی ہی نفیس چیزیں اگائی ہیں
And have they not discerned the earth — what a variety of excellent vegetation We have caused to grow in it?
إِنَّ فِي ذَلِكَ لَآيَةً وَمَا كَانَ أَكْثَرُهُم مُّؤْمِنِينَ(8)
بیشک اس میں ضرور (قدرتِ الٰہیہ کی) نشانی ہے اور ان میں سے اکثر لوگ ایمان لانے والے نہیں ہیں
Surely there is a Sign in it (of Allah’s Might) but most of them are not the ones to believe.
وَإِنَّ رَبَّكَ لَهُوَ الْعَزِيزُ الرَّحِيمُ(9)
اور یقیناً آپ کا رب ہی تو غالب، مہربان ہے
And assuredly your Lord alone is the Almighty, Ever-Merciful.
وَإِذْ نَادَى رَبُّكَ مُوسَى أَنِ ائْتِ الْقَوْمَ الظَّالِمِينَ(10)
اور (وہ واقعہ یاد کیجئے) جب آپ کے رب نے موسٰی (علیہ السلام) کو نِدا دی کہ تم ظالموں کی قوم کے پاس جاؤ
And (recall the incident) when your Lord called to Musa (Moses): ‘Go to the wrongdoing people;
التالي



جميع الحقوق محفوظة © arab-exams.com
  2014-2019
operation time = 0.010488033294678