القرآن الكريم مع الترجمة

    الفهرس    
20. سورة طهٰ
طه(1)
طا، ہا (حقیقی معنی اﷲ اور رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم ہی بہتر جانتے ہیں)
Ta-Ha. (Only Allah and the Messenger know the real meaning.)
مَا أَنزَلْنَا عَلَيْكَ الْقُرْآنَ لِتَشْقَى(2)
(اے محبوبِ مکرّم!) ہم نے آپ پر قرآن (اس لئے) نازل نہیں فرمایا کہ آپ مشقت میں پڑ جائیں
(O My Esteemed Beloved!) We have not revealed the Qur’an to you that you land in distress.
إِلَّا تَذْكِرَةً لِّمَن يَخْشَى(3)
مگر (اسے) اس شخص کے لئے نصیحت (بنا کر اتارا) ہے جو (اپنے رب سے) ڈرتا ہے
But (it) is (revealed as) admonition for him who fears (his Lord).
تَنْزِيلًا مِّمَّنْ خَلَقَ الْأَرْضَ وَالسَّمَاوَاتِ الْعُلَى(4)
(یہ) اس (اللہ) کی طرف سے اتارا ہوا ہے جس نے زمین اور بلند و بالا آسمان پیدا فرمائے
(This) has been revealed by (Allah) Who created the earth and lofty heavens.
الرَّحْمَنُ عَلَى الْعَرْشِ اسْتَوَى(5)
(وہ) نہایت رحمت والا (ہے) جو عرش (یعنی جملہ نظام ہائے کائنات کے اقتدار) پر متمکّن ہوگیا
(He is) Most Kind Who settled on the Throne (of Power and Supreme Authority over all the systems of the universe).
لَهُ مَا فِي السَّمَاوَاتِ وَمَا فِي الْأَرْضِ وَمَا بَيْنَهُمَا وَمَا تَحْتَ الثَّرَى(6)
(پس) جو کچھ آسمانوں (کی بالائی نوری کائناتوں اور خلائی مادی کائناتوں) میں ہے اور جو کچھ زمین میں ہے اور جو کچھ ان دونوں کے درمیان (فضائی اور ہوائی کرّوں میں) ہے اور جو کچھ سطح ارضی کے نیچے آخری تہہ تک ہے سب اسی کے (نظام اور قدرت کے تابع) ہیں
(So) whatever is in the heavens (i.e. the upper divine and celestial spheres and spatial terrestrial spheres) and whatever is in the earth and whatever is in between the two (i.e. the atmospheric spheres) and whatever is beneath the soil to its bed, all are (functioning in compliance with) His (command and control system).
وَإِن تَجْهَرْ بِالْقَوْلِ فَإِنَّهُ يَعْلَمُ السِّرَّ وَأَخْفَى(7)
اور اگر آپ ذکر و دعا میں جہر (یعنی آواز بلند) کریں (تو بھی کوئی حرج نہیں) وہ تو سِرّ (یعنی دلوں کے رازوں) اور اخفی (یعنی سب سے زیادہ مخفی بھیدوں) کو بھی جانتا ہے (تو بلند التجاؤں کو کیوں نہیں سنے گا)
And (there is no harm) if, in remembrance and Prayer, you raise (louden your voice). He knows even the secrets (of hearts) and also the most hidden mysteries. (Then how He will not hear the loud supplications!)
اللَّهُ لَا إِلَهَ إِلَّا هُوَ لَهُ الْأَسْمَاءُ الْحُسْنَى(8)
اللہ (اسی کا اسمِ ذات) ہے جس کے سوا کوئی معبود نہیں (گویا تم اسی کا اثبات کرو اور باقی سب جھوٹے معبودوں کی نفی کر دو)، اس کے لئے (اور بھی) بہت خوبصورت نام ہیں (جو اس کی حسین و جمیل صفات کا پتہ دیتے ہیں)
Allah is (His Self-Name) besides Whom there is no God (i.e. believe in Him alone and deny all other false gods). There are (also) many other Beautiful Names for Him (that speak of His most beautiful and fascinating attributes).
وَهَلْ أَتَاكَ حَدِيثُ مُوسَى(9)
اور کیا آپ کے پاس موسٰی (علیہ السلام) کی خبر آچکی ہے
And has the account of Musa (Moses) reached you?
إِذْ رَأَى نَارًا فَقَالَ لِأَهْلِهِ امْكُثُوا إِنِّي آنَسْتُ نَارًا لَّعَلِّي آتِيكُم مِّنْهَا بِقَبَسٍ أَوْ أَجِدُ عَلَى النَّارِ هُدًى(10)
جب موسٰی (علیہ السلام) نے (مدین سے واپس مصر آتے ہوئے) ایک آگ دیکھی تو انہوں نے اپنے گھر والوں سے کہا: تم یہاں ٹھہرے رہو میں نے ایک آگ دیکھی ہے (یا میں نے ایک آگ میں انس و محبت کا شعلہ پایا ہے) شاید میں اس میں سے کوئی چنگاری تمہارے لئے (بھی) لے آؤں یا میں اس آگ پر (سے وہ) رہنمائی پا لوں (جس کی تلاش میں سرگرداں ہوں)
When Musa (Moses) saw a fire (on his way back to Egypt from Madyan), he said to his family: ‘Stay here. I have seen a fire (or I have perceived a flash of love and cordiality in a fire). Perhaps I may bring a brand from it for you (also) or I find at that fire the guidance (which I am searching for).’
التالي



جميع الحقوق محفوظة © arab-exams.com
  2014-2019
operation time = 0.016520977020264