القرآن الكريم مع الترجمة

    الفهرس    
102. سورة التَّکَاثُر
أَلْهَاكُمُ التَّكَاثُرُO(1)
تمہیں کثرتِ مال کی ہوس اور فخر نے (آخرت سے) غافل کر دیاo
Your greed for massive wealth and the superiority complex has made you negligent (of the Hereafter),
حَتَّى زُرْتُمُ الْمَقَابِرَO(2)
یہاں تک کہ تم قبروں میں جا پہنچےo
Until you go down to the graves.
كَلَّا سَوْفَ تَعْلَمُونَO(3)
ہرگز نہیں! (مال و دولت تمہارے کام نہیں آئیں گے) تم عنقریب (اس حقیقت کو) جان لو گےo
No indeed! You will soon learn (this reality that wealth and riches will avail you nothing).
ثُمَّ كَلَّا سَوْفَ تَعْلَمُونَO(4)
پھر (آگاہ کیا جاتا ہے:) ہرگز نہیں! عنقریب تمہیں (اپنا انجام) معلوم ہو جائے گاo
Again (you are warned.) No! Never! You will soon learn about (your end).
كَلَّا لَوْ تَعْلَمُونَ عِلْمَ الْيَقِينِO(5)
ہاں ہاں! کاش تم (مال و زَر کی ہوس اور اپنی غفلت کے انجام کو) یقینی علم کے ساتھ جانتے (تو دنیا میں کھو کر آخرت کو اس طرح نہ بھولتے)o
Yes indeed! Would that you knew with the knowledge of certitude (the consequence of greed for wealth and riches and your negligence. Then, lost in the worldly pleasures, you would never forget the Hereafter like this).
لَتَرَوُنَّ الْجَحِيمَO(6)
تم (اپنی حرص کے نتیجے میں) دوزخ کو ضرور دیکھ کر رہو گےo
(Consequent on your greed) you shall surely see Hell.
ثُمَّ لَتَرَوُنَّهَا عَيْنَ الْيَقِينِO(7)
پھر تم اسے ضرور یقین کی آنکھ سے دیکھ لو گےo
Then you shall certainly see it with the eye of certitude.
ثُمَّ لَتُسْأَلُنَّ يَوْمَئِذٍ عَنِ النَّعِيمِO(8)
پھر اس دن تم سے (اﷲ کی) نعمتوں کے بارے میں ضرور پوچھا جائے گا (کہ تم نے انہیں کہاں کہاں اور کیسے کیسے خرچ کیا تھا)o
Then on that Day you will certainly be questioned about the bounties (given to you by Allah and the way you consumed them).
التالي



جميع الحقوق محفوظة © arab-exams.com
  2014-2018
operation time = 0.016531944274902